’’گدھ‘ (‘حصہ اول ) (1) تحریر:۔ وسیم بن اشرف، ۔ دنیا میڈیا گروپ۔ ملتان

’’اے چکنی کیا گُل کھلا کے آئی ہے‘‘ ایک خرانٹ عورت رانو سے مخاطب تھی، رانو ہر ذی نفس سے بے خبر بیرک کی چھت کو گھور رہی تھی۔ ’’اے گلابو میں تیرے سے پوچھ رہی ہوں‘‘ قریب آ کر اس نے رانو کو کندھے سے پکڑ کر جھنجھوڑا، رانواس اچانک پڑنے والی افتاد سے مزید پڑھیں

ادرک کا سواد ( امجد جاوید ۔حاصل پور پاکستان )

شہر بھر کی طوائفوں نے تلسیؔ کی واپسی پر ذرا سی بھی حیرت کا اظہار نہیں کیا۔ چند ماہ پہلے ایک پنڈت کے بھاشن سے متاثر ہو کر اس نےسب کچھ چھوڑ دیا تھا۔ اس نے جوگ لے لیا تھا۔ تھوڑے ہی دنوں کے بعد پتہ چلا کہ وہ پنڈت کے بنائے ہوئے آشرم میں مزید پڑھیں

بغاوت……مقام فکر (بشکریہ جاوید چوہدری)

اس نے اپنے باپ کو قتل کر کے قبیلے کی سرداری حاصل کی تھی اور بیٹھتے ہی اعلان کر دیا تھا کہ جس کسی نے میرے خلاف بغاوت کی اس کو موت کی سزا کا سامنا کرنا پڑے گالیکن اس کے ا س اعلان کے باوجود بھی باغی پیدا ہوگیا تھا اور وہ بھی کوئی مزید پڑھیں

ادھورا رشتہ ،پارٹ…3 آخری (و سیم بن اشرف)

’’تمیز سے رہو اگر میں نے وارث کی وجہ سے تمہیں گھر آنے جانے کی اجازت دی ہے تو گھر والا بننے کی کوشش نہ کرو، تم کیا سمجھتے ہو میں ماضی کو دہراؤں گی، یہ مت سمجھنا میں کمزور پڑ گئی ہوں اور مجھے تمہارے سہارے کی ضرورت ہے، میں اپنے بچے کو اداس مزید پڑھیں

ادھورا رشتہ۔۔۔پارٹ 2 ( وسیم بن اشرف)

میں چاہتی ہوں کہ تم صرف میرے بن کے رہو، کب آئے گا وہ وقت‘‘ میں شکوہ کرتی۔ ’’میں نے تو تمہیں پہلے ہی بتا دیا تھا کہ اپنی وائف کو نہیں چھوڑ سکتا‘‘ جب وہ میری گود میں سر رکھ کر یہ کہتا تو میں برف کی طرح سرد پڑ جاتی۔ ’’میرا ایک دوست مزید پڑھیں

’’ادھورا رشتہ‘‘پارٹ 1 ٭…( وسیم بن اشرف)

’’تم میری کہانی کب لکھو گی صائمہ‘‘متعدد بار اس نے مجھ سے پوچھا تھا، لیکن میں ہر بار ٹال مٹول کر جاتی، لیکن وہ بھی ٹالے نہ ٹلتی تھی۔ منہ بناتی اور کبھی ماتھے پر تیوریاں ڈال کر چلی جاتی، پھر جب ملتی تو اس کو یہی شکوہ ہوتا کہ میں اس کی بات کو مزید پڑھیں